آپ کا ہفتہ کیسا گزرے گا؟

آپ نہیں چاہتے کہ لوگوں کو آپ کے کمزورپہلوؤں کا پتہ چلے،یہ انسانی فطرت ہے۔لیکن بہتر یہی ہے کہ آپ آہستہ آہستہ اپنی کمزوریوں کو دور کرنے کی منصوبہ بندی کریں۔جتنی انرجی آپ اپنی کمزوریوں کو چھپانے میں استعمال کرتے ہیں،اس سے کم انرجی استعمال کرکے آپ اپنی کمزوریوں کو دور کر سکتے ہیں۔
کامیابی ایک تتلی کی مانند ہے،اگر آپ اس کے پیچھے بھاگیں گے تو یہ دور بھاگ جائے گی،لیکن اگر آپ اپنے کام میں مگن ہو جائیں گے تو یہ آپ کے کندھے پر آ بیٹھے گی۔انسان کی زندگی میں بعض اوقات ایسے لمحات بھی آتے ہیں کہ جب بہترین راستہ یہی ہوتا ہے کہ ہر طرف سے آنکھیں بند کر کےصرف اپنے مقصد پر توجہ دی جائے۔
لوگوں کے رویے کے پیچھے موجود وجوہات جاننے کی کوشش کریں،اس طرح آپ انہیں زیادہ بہتر طریقے سے ڈیل کرسکیں گے۔یہ وجوہات کچھ بھی ہو سکتی ہیں:آپ کی ذات پر عدم اعتماد،تعلیم کی کمی،احساسِ محرومی،وقت گزاری،عدم تحفط کا احساس ،عادت سے مجبوری وغیرہ۔اگر آپ درست وجہ کو جان لیں تو آپ کے دوسروں سے تعلقات بھی درست ہو جائیں گے۔
اپنا مطالعہ وسیع کریں،اچھی کتابوں اور اچھے مضامین سے تعلق جوڑیں،اس سے آپ کو زندگی کے مسائل کو سمجھنے اور انھیں حل کرنے میں مدد ملے گی۔کتاب سے اچھا دوست اور کوئی نہیں ہوتا۔
اگر دنیا میں کوئی ایک شخص بھی ایسا ہے کہ جس کی زندگی آپ کی وجہ سے بہتر ہوئی ہے،توآپ کو مبارک ہو،آپ کامیاب ہیں۔


 
 
 
ہوم پیج دیگر منتخب آرٹیکلز

کپل شرما کا بُرج
ہنسی کے شہنشاہ، جنکے چٹکلوں نے بڑوں اور بچوں، سب کے چہروں پر مسکراہٹیں بکھیری ہیں وہ صرف اور صرف انڈیا کے کپل شرما ہی ہیں۔ ان کے شونے جتنی کامیابی حاصل کی ہے وہ سب کے سامنے ہے۔ آج تو کپل کو سب جانتے ہیں لیکن کپل یہاں تک پہنچنے سے پہلے ناقابل یقین کام بھی کر چکے ہیں ۔خواہ وہ بوتلیں بیچنا ہو ، اخباریں بیچنا، یا کچھ اور۔ان کے والد پولیس میں کانسٹیبل تھے۔ لیکن ہمت نہ ہاری۔ انکو بچپن سے ہی گانے کا بھی شوق تھا،سو کامیڈی کیساتھ ساتھ گانے کا شوق بھی کبھی کبھار پورا کرتے رہتے ہیں۔ انکو موسیقی سے اتنا لگاؤ ہے کہ طبلا، گٹار، پیانو، بانسری سب بجا لیتے ہیں۔
اتنے کم وقت میں کپل انڈیا کے تیسرے مشہور ترین سلیبرٹی بن چکےہیں۔ ہر مشہور شخص ان کے شو میں شرکت کر چکا ہے۔ کپل کو کالج کے دنوں میں تھیٹر میں ساتھی اداکارہ سے پہلی اور آخری محبت ہوئی تھی۔ ہاں البتہ اب شو میں آنے والی ہر خاتون سے محبت ہو جاتی ہے۔کوئی بھی ایسی ایکٹریس نہیں ہے، جس نے کپل کیساتھ سیلفی نہ لی ہو۔
کپل بے سہارہ کتوں اور بلیوں کے معاملے میں بہت حساس ہیں۔اس کے علاوہ انڈیا میں ہاتھیوں اور دوسرے جانوروں کے تحفظ کے لیے بھی کوشاں رہتے ہیں۔
تاریخ پیدائش اور بُرج
آئیے ذرا کپل شرما کی تاریخ پیدائش پر غور کرتے ہیں اور ان کی شخصیت کا حال جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔
تاریخ پیدائش: 2 اپریل 1981 (عمر 37 سال)۔ مقام: امرتسر، انڈیا
تاریخ پیدائش کے مطابق انکا برج حمل ہے۔ برج حمل کے لوگوں میں خود اعتمادی، ایمانداری، جوش اور جواں مردی فطری طور پر پائی جاتی ہے۔ ان لوگوں کو مواقع کا صحیح طرح استعمال کرنا آتا ہے۔ لیکن بے صبرا پن اور غصہ انکی کشتی ہمیشہ ڈبو دیتا ہے۔ ان لوگوں کو اپنے حواس پر قابو پانے کی اشد ضرورت ہے۔ کیونکہ اگر یونہی بے قابو رہے، تو اپنا بہت نقصان کر بیٹھیں گے۔
کپل شرما میں یہ تمام خصوصیات دیکھی جا سکتی ہیں۔

 

صدر اوبامہ کا بُرج
پورا نام باراک حسین اوبامہ ہے۔ امریکہ کے 44ویں صدر رہے ہیں۔ والدین کی طلاق کے بعد دو سال کی عمر سے ہی زندگی نے انھیں کئی رنگ دکھائے۔ ان حالات کے باوجوداوبامہ صاحب نے پڑھائی کو تھا مے رکھا اور سکول کے بہترین طالب علم بننے کا سفر جاری رکھا۔ اوبامہ کیلئے صدارت تک کا سفر آسان نہیں تھا اس سے پہلے انھوں نے وکالت کی، استاد بھی رہے، یہاں تک کہ چھوٹی موٹی چیزیں بھی بیچیں۔
انھیں کتابیں پڑھنے کا کافی شوق ہے، ہیری پوٹر سیریز انکی فیورٹ کتاب ہے۔ اوبامہ جب بھی پریشان ہوتے ہیں، اچھا سا میوزک لگاتے ہیں اور اپنے آپ کو پر سکون کر لیتے ہیں۔ یہ طریقہ کافی اچھا ہے ویسے۔ حالانکہ یہ صدر رہےہیں لیکن عام لوگوں کی طرح انھیں کھانا پکانے کا بہت شوق ہے، بڑے دل سے بناتے ہیں۔ لیکن سموکنگ سے ابھی تک جان نہیں چھڑوا پائے، حالانکہ اپنی بیوی سے وعدہ کیا تھا کہ صدر بن کر سگریٹ چھوڑ دونگا لیکن ایسا ہوا نہیں۔ اوبامہ میں ایک بچہ بھی چھپا ہے جسے سپائڈر مین جیسے کردار اکٹھے کرنا پسند ہے۔ ان میں ایک اور ہنر بھی ہے، وہ ہے باسکٹ بال۔ اوبامہ باسکٹ بال میں بہت، بہت زیادہ اچھے ہیں۔
تاریخ پیدائش اور بُرج
تاریخ پیدائش: 14 اگست 1961ء (عمر57 سال)۔ مقام: ہوائی
آئیے ذرا امریکی صدر اوبامہ کی تاریخ پیدائش پر غور کرتے ہیں اور ان کی شخصیت کا حال جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔
تاریخ پیدائش کے مطابق انکا برج اسد ہے۔ برج اسد کے لوگوں میں آپ ہمدردی، خوشی، نازکی، سخاوت اور ہنر واضح طور پر دیکھ سکتے ہیں۔ لیکن جہاں اچھائیاں ہیں وہیں غرور، بچپنا، خود غرضی اور سُستی جیسی خامیاں بھی ہیں۔ لیکن اگر انسان خود کوبدلنے کی ٹھان لے تو ان خامیوں سے چھٹکارا حاصل کیاجا سکتا ہے۔
باراک اوبامہ میں یہ تمام صفات دیکھی جا سکتی ہیں۔


اپنے تاثرات بیان کریں !