بُرج عقرب کی مشہور شخصیات
شاہ رخ خان
بھارت کے نامی گرامی اداکار شاہ رخ خان جو ایس آر کے کے نام سے بھی مشہور ہیں۔ یہ انڈیا کے سب سے زیادہ دولت مند ایکٹر ہیں۔ اب تک 80 سے زائد بالی وڈ فلموں میں کام کر چکے ہیں۔ دل والے دلہنیا لے جائیں گے ان کی کامیاب فلموں میں سے ایک ہے، اس فلم میں شاہ رخ نے راج نامی لڑکے کا کردار ادا کیا تھا جو سمرن نامی لڑکی کی محبت میں مبتلا ہوجاتا ہے۔ شاہ رخ صرف ایکٹر ہی نہیں بلکہ ماس کمیونیکیشن میں ماسٹرز ڈگری بھی رکھتے ہیں۔ انکا لکی نمبر 555 ہے جو کہ یہ ہر چیز میں لانے کی کوشش کرتے ہیں۔ شاہ رخ اپنی رومانوی شخصیت کی وجہ سے خواتین میں عرصہ دراز سے ہی مقبول ہیں۔ 18 سال کی عمر سے اب 52 کے ہو جانے کے بعد بھی ہر دوسری عورت انکی فین ہے۔ تبھی یہ صاحب رات کو سوتے وقت بھی اپنے پجامے استری کر وا کے پہنتے ہیں،کیونکہ انکو لگتا ہے کہ خواب میں نہ جانے کون ان سےملنے آجائے۔ سگریٹ کا استعمال بے دھڑک کرتے ہیں۔
اس مایہ ناز اداکار کو گھوڑوں سے بہت ڈر لگتا ہے۔ یہ جناب آئس کریم کو بھی بالکل پسند نہیں کرتے۔ کچھ بھی دے دو، لیکن آئس کریم نہیں۔ انھیں لوگوں کیساتھ تھیٹر میں جا کرفلم دیکھنا پسند نہیں ہے۔ بلکہ یہ فلم اپنی بی ایم ڈبلیو گاڑی میں اکیلے بیٹھ کر دیکھتے ہیں۔ ہاں! اپنی فیملی سے بہت محبت کرتے ہیں خواہ وہ ان کی بیوی گوری خان ہو یا انکے تین بچے ہوں۔
نومبر 2015ء میں شاہ رخ خان نے بھارت میں بڑھتی عدم رواداری پر تشویش کا اظہار کیا۔ ان کے اس بیان سے شیو سینا اور کئی ہندو تنظیمیں مشتعل ہوگئی تھیں اور انہوں نے شاہ رخ خان کی جاری فلم دل والے کے خلاف ملک بھر میں احتجاج کیا۔ فلم کے علاوہ کرکٹ کے میدان میں بھی شاہ رخ نے نام کمایا ہے ۔ انڈین پریمئر لیگ کی ٹیم ’کولکتہ نائٹ رائیڈرز‘ کے شریک مالک بن کر 2012ء میں ان کی ٹیم نے آئی پی ایل ٹائٹل اپنے نام کیا ۔
تاریخ پیدائش اور بُرج
آئیے ذرا شاہ رخ خان کی تاریخ پیدائش پر غور کرتے ہیں اور ان کی شخصیت کو جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔
تاریخ پیدائش: 2 نومبر 1965 (عمر52 سال)۔ مقام: نئی دلی، انڈیا
یہ لوگ بہت جنونی اور قابل ہوا کرتے ہیں ۔ انکا جوش و جذبہ انہیں ہر منزل تک لے جاتا ہے۔ بہادری اور ہمت ان کے پاس کثرت سے پائی جاتی ہیں ۔ یہ لوگ سچے دوست ثابت ہوتے ہیں اور وفادار ی ان میں نمایاں ہوتی ہے۔ یہ لوگ اچھے لیڈر والی تمام خصوصیات کے حامل ہوتے ہیں۔ چیزیں راز میں رکھنا انکا شیوہ ہوتا ہے۔ سچ کی تلاش میں لگے رہنا اور حقیقت جاننا انکے لیے بہت ضروری ہے۔
شاہ رخ خان میں یہ تمام خصوصیات نوٹ کی جا سکتی ہیں۔

 
 
مشہورعقرب شخصیات کے متعلق دلچسپ حقائق
جنرل قمرباجوہ
ہیلری کلنٹن
اندرا گاندھی
مصور پکاسو
میڈم کیوری
مارٹن لوتھر
گیلپ
مشہورعقرب شخصیات کے متعلق دلچسپ حقائق
جنرل قمرباجوہ
ہیلری کلنٹن
ریما خان
مصور پکاسو
مارٹن لوتھر
اندرا گاندھی
میڈم کیوری
گیلپ


 
 
 
ہوم پیج دیگر منتخب آرٹیکلز

امیر تیمور کا بُرج
امیر تیمور14 ویں صدی کا منگول فاتح تھا۔ یہ ایک بے رحم اور ظالم ترین شخص تھا، جسکا واحد مقصد اپنی سلطنت کو دوبارہ تعمیر کرنا تھا۔ تیمور نے ایک خاندان تیمورڈ قائم کیا لیکن یہ خاندان 17 ملین لوگوں کی زندگیوں کی قیمت پر تعمیر کیا گیا تھا۔ اس نے دنیا کی وسیع ترین امپائر کو فتح کیا۔ اسکی دہشت پورے ایشیا میں گونجتی تھی۔
مر جانے کے بعد بھی اسکی دہشت ویسی ہی ہے۔ مشہور تھا کہ جو کو ئی اسکا مقبرہ کھو لے گا اس پر قہر نازل ہو گا۔ لوگ یہ بھی کہتے تھے کہ قبر کھلنے کے تین دن بعد سب کچھ تباہ ہو جائے گا۔ لیکن 1942 ء میں اسکی قبر کو کھولا گیا تو پورا عجائب گھر گلاب اور کافور کی خوشبو سے مہکنے لگا۔ لوگوں نے اسے معجزہ سمجھا لیکن وہ صرف تیل کی خوشبو تھی جو اسکی لاش کو لگائے گئے تھے۔ تیمور کو شطرنج کھیلنا بہت پسند تھا اسکا خیال تھا کہ شطرنج سے اسے نئی نئی چالیں سوجھتی ہیں جنہیں جنگ میں استعمال کیا جا سکتا ہے۔
تاریخ پیدائش اور بُرج
تاریخ پیدائش: 9 اپریل 1336ء۔ مقام: کیش
آئیے ذرا امیر تیمور کی تاریخ پیدائش پر غور کرتے ہیں اور ان کی شخصیت کا حال جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔
تاریخ پیدائش کے مطابق انکا برج حمل ہے۔ برج حمل کے لوگوں کا ذکر کیاجائے تویہ لوگ جرات مند اور پراعتماد ہوتے ہیں۔ یہ لو گ امید کا دامن کبھی بھی ہاتھ سے جانے نہیں دیتے۔ لیکن ان لوگوں کی طبیعت ذرا جارحانہ ہوتی ہے۔ اپنے موڈ کے مطابق چلتے ہیں اور عدم اطمینان رکھتے ہیں۔ انھیں خود پر کام کرنا چاہیئے۔
امیر تیمور میں یہ تمام خوبیاں دیکھی جا سکتی ہیں۔

 

آصف زرداری کا بُرج
یہ پاکستانی سیاست کے داؤ پیچ پر عبور رکھنے والے سیاست دان ہیں، جو صدر بھی رہ چکے ہیں۔ کسی زمانے میں سندھی کلچر سے تعلق رکھنے والے ایک گمنام سے نوجوان تھے لیکن بینظیر بھٹو سے شادی کے بعد انکا پس منظر ہی بدل گیا۔ یہ شادی پاکستانی روایات کے مطابق ہوئی اور ایک ارینج میرج تھی۔ یہ رشتہ زرداری کی سوتیلی والدہ ٹمی بخاری اور بیگم نصرت بھٹو نے طے کیا۔ اس وقت پاکستان میں جنرل ضیاالحق کی حکومت تھی۔ اس شادی کے چند ماہ بعد ہی جنرل ضیاالحق جہاز کے حادثے میں انتقال کر گئے۔ الیکشن کے بعد بینظیر بھٹو وزیراعظم بن گئیں تو زرداری صاحب کو پاکستان کا پہلا مرد ِاول بننے کا اعزاز حاصل ہوا۔
زرداری کے والد ایک قبائلی سردار تھے اور بھٹو کے ابتدائی سیاسی ساتھیوں میں شامل تھے۔ کراچی کا ایک مشہور سینما بھی ان کی ملکیت تھا۔ بچپن میں آصف زرداری نے ایک فلم میں بطور چائلڈ سٹار کام بھی کیا۔ زرداری نے کراچی کے جس سکول سے ابتدائی تعلیم حاصل کی، اسی سکول سے پرویز مشرف اورسابق وزیراعظم شوکت عزیز نے بھی ابتدائی تعلیم حاصل کی تھی۔ زرداری اوائل عمر سے ہی یاروں کے یار کے طور پر مشہور ہیں۔ زرداری کو باکسنگ اور پولو کھیلنے کا بہت شوق ہے۔ اسی باکسنگ کا شوق ان کی بیٹی بختاور کو بھی ہے۔ زرداری کی حفاظت کے لیے روزانہ کالے بکرے کا صدقہ دیا جاتا ہے، جس کا گوشت غریبوں میں بانٹ دیاجاتا ہے۔یہ سلسلہ ایک لمبے عرصے سے جاری ہے۔
زرداری صاحب پر کرپشن کے الزامات بھی لگے اور انہوں نے جیل میں گیارہ سال قید بھی کاٹی ہے، جہاں ان پر تشدد بھی ہوا۔ جس کے باعث وہ دماغی امراض کا شکار بھی ہوئے، لیکن اب ٹھیک ہیں۔ جیل میں بھی آصف زرداری خبروں کی زینت بنے رہے۔ کیونکہ انہوں نے قیدیوں کی فلاح و بہبود کے لیے کئی کام کیے، جن میں کھانے اور کپڑوں کی تقسیم اور غریب قیدیوں کی ضمانت کے لیے رقم کا بندوبست بھی شامل ہے۔ بالآخر زرداری کو تمام الزامات میں بری ہونے کے بعد رہا کر دیا گیا۔
بیوی کی وفات کے بعد لوگوں کی ہمدردیاں تو ملیں، لیکن ساتھ ووٹ بھی ملے اور صدر پاکستان بن گئے۔ اس عرصہ میں زرداری نے مفاہمت کی سیاست کو فروغ دیا۔ 2005 ء میں زرداری صاحب پاکستان کے دوسرے امیر ترین شخص تھے۔ بینظیر کی دولت کو انھوں نے غریب عوام تک پہنچانے کیلئے کئی ادارے بھی بنوائے ہیں۔
تاریخ پیدائش اور بُرج
آئیے ذرا آصف زرداری کی تاریخ پیدائش پر غور کرتے ہیں اور ان کی شخصیت کا حال جاننے کی کوشش کرتے ہیں۔
تاریخ پیدائش: 26 جولائی 1955 (عمر 62 سال)۔ مقام: کراچی
تاریخ پیدائش کے مطابق انکا برج اسد ہے۔ برج اسد کے لوگوں میں نئی نئی چیزوں کیساتھ تجربہ کرنے کا جذبہ عروج پر ہوا کرتا ہے۔ یہ لوگ جو کام کرتے ہیں اس میں پوری توجہ اور لگن ڈال دیتے ہیں ۔ خوشیاں پھیلانے والے ہمدرد لوگ۔ البتہ مغرور اور خود غرض بھی ہوتے ہیں ۔ اگر ان خامیوں پر توجہ دیں اور انھیں بدلنے کی کوشش کریں تو بہت کچھ حاصل کر سکتے ہیں۔
آصف زرداری میں یہ تمام خصوصیات واضح طور پر دیکھی جا سکتی ہیں۔


اپنے تاثرات بیان کریں !